انا لله وانا اليه راجعون تحریک لبیک پاکستان کے سربراہ علامہ خادم حسین رضوی انتقال فرما گئے

لاہور (این پی پی) تحریک لبیک پاکستان کے سربراہ خادم حسین رضوی انتقال کر گئے۔
انا لله وانا اليه راجعون


مولانا خادم حسین رضوی رضائے الہی سے وفات پا گئے اللہ تعالی ان کے درجات بلند کرے، ان کی بخشش فرمائے، ان کے تمام صغیرہ کبیرہ گناہ معاف کرےاور جنت الفردوس میں اعلی مقام عطا فرمائے آمین ثم آمین.

فیملی ذرائع نے تصدیق کی ہے کہ خادم حسین رضوی کو گزشتہ چند روز سے بخار تھا اور وہ آج انتقال کرگئے ہیں۔

اہلِ خانہ کا کہنا ہے کہ خادم حسین رضوی گزشتہ کئی روز سے بخار میں مبتلا تھے۔ ناسازی طبیعت کے باعث انہیں اسپتال منتقل کیا گیا جہاں وہ زیرعلاج رہنے کے بعد خالقِ حقیقی سے جا ملے۔

خادم حسین رضوی 22 جون 1966 کو نکہ توت ضلع اٹک میں حاجی لعل خان کے ہاں پیدا ہوئے۔ انہوں نے جہلم و دینہ کے مدارس دینیہ سے حفظ و تجوید کی تعلیم حاصل کی جس کے بعد لاہور میں جامعہ نظامیہ رضویہ سے درس نظامی کی تکمیل کی۔

خادم حسین رضوی سیاست میں آنے سے قبل لاہور میں محکمہ اوقاف کی مسجد میں خطیب تھے، ممتاز قادری کی سزا پر عملدرآمد کے بعد انہوں نے کھل کر حکومت وقت پر تنقید کی جس کی وجہ سے انہیں محکمہ اوقاف نے ان کو عہدے سے ہٹا دیا تھا۔

فرانس میں حکومتی سرپرستی میں گستاخانہ خاکوں کے خلاف فیض آباد انٹرچنیج پر احتجاج کے بعد دو روز قبل ہی خادم رضوی کی قیادت میں ٹی ایل پی نے حکومت سے مذاکرات کیے تھے۔

khadim huissain rizvi died

اپنا تبصرہ بھیجیں